سیکشن ہدیہ جات و نذورات

شعبہ ھدیہ جات و نذورات ہی وہ واحد شرعی و قانونی شعبہ ہے جو زائرین و مومنین کی طرف سےاس عظیم بارگاہ میں اپنی عقیدت سے پیش کئے گئے ھدایا،اموال اور دیگر اشیائ کو وصول کرنے کا مجاز ہے۔اس کے مزید چند مندرجہ ذیل شعبہ جات ہیں:

(۱ ) شعبہ وصولی ٗ اموال نقدیہ: جو (ا) عراقی نقدی وصول کر کے قوانین شریعت اور دینے والے شخص کی منشاٗ کے مطابق  مختص کرتا ہے۔

(ب) غیرعراقی نقدی وصول کر کے قوانین شریعت اور دینے والے شخص کی منشاٗ کے مطابق  مختص کرتا ہے۔

(۲) شعبہ وصولی اموال عینیہ :جس میں مندرجہ ذیل شعبہ جات ہیں:

(ا) سونے اور قیمتی جواہرات کی وصولی کا شعبہ۔

(۲) چوپایوں کی وصولی کا شعبہ

(۳)دیگر مختلف اشیائ جیسے مصلیٰ جات،الیکٹرونکس،ائرکنڈیشنز،نماز والی کرسیوں وغیرہ کی وصولی کا شعبہ

(۴) مناسبات کے دنوں میں تبرکات کی تقسیم کا شعبہ۔

ان تمام شعبہ جات کو وصول ہونے والی اشیاٗ کا استعمال کچھ اس طرح سے ہے:

ھدیہ جات: یہ ایک عمومی عنوان ہے جس کے تحت ملنے والے اموال حرم کے حوالے سے کسی بھی جگہ خرچ کئے جا سکتے ہیں۔

تعمیراتی فنڈ: یہ حرم مطھر میں ہونے والی کسی بھی تعمیر میں خرچ ہو سکتا ہے۔

صحن حضرت فاطمۃ الزھرائؑ کا تعمیراتی فنڈ۔

مہمان خانے کے لئے ھدیہ: اسے مہمان خانہٗ امیرالمومنینؑ میں ہی خرچ کیا جاتا ہے۔

شعبہ پانی کی شراکتی امداد۔

شعبہ لائٹنگ کی شراکتی امداد۔

چوپائیوں کی خرید یا اس میں شرکت۔

حرم کے قالینات کے مماثل مصلیٰ جات کی خریداری میں شرکت۔اور اس میں بہتر ہوتا ہے اگر اس مد میں دئے جانے والے اموال ھدیہ کے عنوان سے دیئے جائیں تا کہ بہتر اور با آسانی حرم امیر المومنینؑ کی خدمت ہو سکے۔

شعبہ ھدایا و نذورات حرم میں واقع کمرہ نمبر ۲۶ ( جو سید ابو الحسن اصفھانی (رح) سے منسوب ہے اور باب امام رضاؑ المعروف باب السا عۃ کے ساتھ سونے کے ایوان کے بالکل سامنے واقع ہے)میں قائم ہے۔

اور عراق میں اسکا اکاونٹ نمبر ۳۰۰۰۳ ہے۔